Beseeching for Help and its Legal Status

تفصیلی فہرست

عرضِ مرتِّب

باب اوّل : مُبادیاتِ اِستغاثہ

1۔ لفظِ اِستغاثہ کی لُغوی تحقیق

2۔ اِستغاثہ کی اَقسام

  • اِستغاثہ بالقول
  • اِستغاثہ بالعمل

3۔ اِستغاثہ اور توسّل میں باہمی ربط

4۔ اِستغاثہ اور دُعا میں بنیادی فرق

5۔ کلامِ باری تعالیٰ میں لفظِ دُعا کا اِستعمال

  • النِّدَآءُ
  • التَّسْمِيَةُ
  • الإِسْتِغَاثَةُ
  • الحَثُّ عَلَی الْقَصْدِ
  • الطَّلَبُ
  • الدُّعَآءُ
  • العِبَادَةُ
  • الخِطَابُ

6۔ دُعا کی خودساختہ تقسیم

  • دُعائے عبادت
  • دُعائے سوال

7۔ تقسیم کا مفاد ’’مغایرت‘‘ یہاں مفقود ہے

8۔ دُعا سے مُراد محض عبادت کا عدم ثبوت

9۔ سورۂ فاتحہ اور تصوّرِ اِستعانت و اِستغاثہ

باب دُوُم : تاجدارِ اَنبیاء صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم سے اِستغاثہ کا مفہوم

10۔ اِستغاثہ۔ ۔ ۔ اَحادیثِ مبارکہ اور عملِ صحابہ کی روشنی میں

11۔ سیدنا ابوہُریرہ رضی اللہ عنہ کا اِستغاثہ

12۔ سیدنا قتادہ بن نعمان رضی اللہ عنہ کا اِستغاثہ

13۔ دُمبل زدہ صحابی رضی اللہ عنہ کا اِستغاثہ

14۔ نابینا صحابی رضی اللہ عنہ کا اِستغاثہ

15۔ ایک صحابی رضی اللہ عنہ کا بارِش کے لئے اِستغاثہ

16۔ سیدنا اَمیر حمزہ رضی اللہ عنہ ۔ ۔ ۔ کاشِفُ الکُرُبات

باب سِوم۔ ۔ ۔ بعد اَز ممات اِستغاثہ کا جواز

17۔ حیاتِ برزخی کا ثبوت

18۔ رُوح کی حیات اور اِستعداد

باب چہارم۔ ۔ ۔ اِزالہءِ اِشکالات

19۔ پہلا اِعتراض۔ ۔ ۔ اِستغاثہ فی نفسہ عبادت ہے

20۔ ہر اِستغاثہ عبادت نہیں ہوتا

21۔ دوسرا اِعتراض۔ ۔ ۔ مافوق الاسباب اُمور میں اِستغاثہ شِرک ہے

22۔ اِعتراض کا علمی محاکمہ

  • پہلا نکتہ
  • دُوسرا نکتہ
  • تیسرا نکتہ

23۔ صحیح اِسلامی عقیدہ

  • چوتھا نکتہ

24۔ حقیقت و مجاز کی تقسیم لابدّی ہے

25۔ ما فوق الاسباب اُمور میں مجاز کا جواز

26۔ جبرئیل علیہ السلام پرشِرک کا فتویٰ؟

27۔ سیدنا عیسیٰ علیہ السلام پر شِرک کا فتویٰ؟

28۔ حقیقی کارساز اﷲ ربّ العزّت ہی ہے

29۔ کیا یہ مُعجزہ نہیں؟

30۔ اﷲ تعالیٰ پر شِرک کا فتویٰ؟

31۔ رُوح پھونکنا درحقیقت فعلِ اِلٰہی ہے

32۔ تیسرا اِعتراض۔ ۔ ۔ اِستغاثہ بالغیر میں سلطہءِ غیبیہ کا شائبہ ہے

33۔ خود ساختہ اِعتقادی فتنے کا ردّ

34۔ ایک وہم کا اِزالہ

35۔ کیا مخلوق کو دُور کا علم ہو سکتا ہے؟

36۔ کشفِ فاروقی

37۔ کشف اور علمِغیب میں فرق

38۔ نبی علیہ السلام کا سوال مسؤل کی قُدرت پر دلیل ہے

39۔ چوتھا اِعتراض۔ ۔ ۔ اﷲ کے سوا کوئی مددگار نہیں

40۔ بُطلانِ اِستدلال

41۔ پانچواں اِعتراض۔ ۔ ۔ سوال اور اِستغاثہ صرف اﷲ سے جائز ہے

42۔ سوال حکمِ باری تعالیٰ ہے

43۔ اور بھی کچھ مانگ

44۔ اِستغاثہ خود حکمِ باری تعالیٰ ہے

45۔ چھٹا اِعتراض۔ ۔ ۔ سرورِ کائنات صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم سے اِستغاثہ کی نفی

46۔ حدیثِ مبارکہ کا صحیح مفہوم

باب پنجم۔ ۔ ۔ اِیمان اور کفر کے مابین حدِ فاصل

47۔ اِیمان اور کفر کے درمیان نسبتِ مجازی کا لحاظ

48۔ حرفِ آخر

کتابیات

Copyrights © 2019 Minhaj-ul-Quran International. All rights reserved