The Sanctity of Muslim Blood

فہرست

پیش لفظ

باب اَوّل : مسلمانوں کے جان و مال کا اِحترام

  1. مومن کی حرمت کعبہ کی حرمت سے زیادہ ہے
  2. مسلمان کی طرف ہتھیار سے محض اشارہ کرنا بھی منع ہے
  3. دورانِ جنگ کسی شخص کے اظہارِ اسلام کے بعد اس کے قتل کی ممانعت
  4. فتنہ پروروں سے ہمدردی اور تعاون کی ممانعت
  5. مساجد پر حملے کرنے والے سب سے بڑے ظالم ہیں

باب دوم : مسلمانوں کو اذیت دینے اور قتل کرنے کی سزا

  1. ایک مومن کا قتل پوری دنیا کی تباہی سے بڑا گناہ ہے
  2. انسانی جان کا قتل مثلِ کفر ہے
  3. مسلمانوں کا قتلِ عام کفریہ فعل ہے
  4. قتل، شرک کی طرح ظلمِ عظیم ہے
  5. خون خرابہ تمام جرائم سے بڑا جرم ہے
  6. مسلمانوں کو (بم دھماکوں یا دیگر طریقوں سے) جلانے والے جہنمی ہیں
  7. مسلمان کو قتل کرنے والے کی کوئی عبادت قبول نہیں ہوگی
  8. مسلمانوں کو تکلیف دینے والے کے لیے عذابِ جہنم

باب سوم : خود کشی فعل حرام ہے

  1. خود کشی کیوں حرام ہے؟
  2. قرآن و حدیث میں خودکشی کی ممانعت
  3. خودکُش دُہرے عذاب کا مستحق ہے
  4. خودکشی کا حکم دینے والے اُمراء کی مذمت
  5. خود کشی کرنے والے پر جنت حرام ہے
  6. دورانِ جہاد بھی خودکشی کرنے والا جہنمی ہے
  7. حضور صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے خودکشی کرنے والے کی نمازِ جنازہ نہیں پڑھائی

خلاصہ کلام

مآخذ و مراجع

Copyrights © 2019 Minhaj-ul-Quran International. All rights reserved